منشیات کا کاروبار کرنے والوں کے خلاف بڑے پیمانے پر کریک ڈاون شروع کیا گیا ہے:آئی جی کشمیر

سری نگر//انسپکٹر جنرل آف پولیس کشمیر رینج ودھی کمار بردی نے جمعے کے روز کہاکہ وادی میں منشیات کا کاروبار کرنے والوں کے خلاف بڑے پیمانے پر کریک ڈاون شروع کیا گیا ہے۔انہوں نے بتایا کہ سبھی اضلاع میں کریک ڈاون کو مزید تیز تر کرنے کی ہدایت دی گئی ہے۔ان باتوں کا اظہار موصوف نے بارہ مولہ میں نامہ نگاروں سے با ت کے دوران کیا۔انہوں نے کہاکہ جموں وکشمیر پولیس نے منشیات کا کاروبار کرنے والوں کے خلاف جو مہم شروع کی ہے اس کے مثبت نتائج سامنے آرہے ہیں۔آئی جی کشمیر کے مطابق سماج میں منشیات جیسی لعنت کو ختم کرنے کی خاطر زمینی سطح پر اقدامات اٹھائے جارہے ہیں۔انہوں نے کہاکہ یومیہ وادی کشمیر میں این ڈی پی ایس ایکٹ کے تحت متعدد کیس رجسٹر ہو رہے ہیں اور جہاں تک بارہ مولہ کا تعلق ہے یہاں پر اس حوالے سے قابل تعریف کام ہو رہا ہے۔ودھی کمار بردی نے کہاکہ منشیات کے خلاف جاری آپریشن کو مزید تیز تر کرنے کی ضرورت ہے اور جوکوئی بھی اس میں ملوث ہوگا اس کو بخشا نہیں جائے گا۔آئی جی کشمیر نے کہاکہ سماج کو بھی منشیات کا روبار کرنے والوں کے بارے میں پولیس کو آگاہ کرنا چاہئے تاکہ اس برائیوں کو جڑ سے اکھاڑ پھینک دیا جاسکے۔بتادیں کہ بارہمولہ پولیس نے ضلع میں سال 2023 کے اختتام تک این ڈی پی ایس ایکٹ کے تحت 264 کیس درج کئے جس کے نتیجے میں 464 منشیات فروشوں کو گرفتار کیا گیا گیا۔پولیس کے مطابق 75 سخت گیر منشیات فروشوں کے خلاف پی آئی ٹی این ڈی پی ایس ایکٹ کے تحت مقدمہ درج کیا ہے۔ ضلع میں کروڑوں مالیت کی ممنوعہ اشیا کو ضبط کیا ہے۔انہوں نے کہا: ‘سال 2023 کے دوران ضلع میں مختلف کارروائیوں کے دوران منشیات فروشوں کی 3 کروڑ روپیے مالیت کی جائیدادیں جن میں 3 مکان، 3 گاڑیاں اور 1.2 کروڑ روپیے کی نقد رقم شامل ہے، ضبط کی گئیں’۔