اب 7 اکتوبر تک بدلے جا سکیں گے 2000 روپے کے نوٹ، آر بی آئی کا فیصلہ

نئی دہلی //جن کے پاس اب بھی 2000 روپے کے نوٹ پڑے ہوئے ہیں، انھیں پریشان ہونے کی ضرورت نہیں ہے۔ آر بی آئی نے اس نوٹ کو بدلنے کی آخری تاریخ یعنی 30 ستمبر میں توسیع کرنے کا اعلان کر دیا ہے۔ ریزرو بینک آف انڈیا نے ہفتہ کے روز ایک پریس ریلیز جاری کیا ہے جس میں بتایا کہ ہے کہ اب 2000 روپے کے نوٹ بدلنے کی آخری تاریخ 7 اکتوبر 2023 کر دی گئی ہے۔ یعنی آپ کے پاس اگر 2000 روپے کے نوٹ ہیں تو آپ 7 اکتوبر تک اسے بدل سکتے ہیں۔ ریزرو بینک آف انڈیا نے جانکاری دی ہے کہ ریویو کیے جانے کے بعد فیصلہ لیا گیا کہ نوٹ بدلنے کی تاریخ میں 7 اکتوبر تک توسیع کی جائے۔

آر بی آئی کی رپورٹ کے مطابق اب تک 93 فیصد 2000 روپے کے نوٹ بینک میں واپس آ چکے ہیں۔ 19 مئی 2023 کو آر بی آئی نے 2000 روپے کے نوٹ کو واپس لینے کا اعلان کیا تھا۔ آر بی آئی نے صارفین سے کہا تھا کہ آپ بینک میں جا کر اپنے نوٹ بدل سکتے ہیں اور دیگر قدروں کے نوٹ کو حاصل کر سکتے ہیں۔

ویسے آر بی آئی نے 7 اکتوبر کے بعد بھی 2000 روپے کے نوٹ بدلنے کا ایک راستہ لوگوں کے لیے کھلا رکھا ہے۔ سنٹرل بینک نے اپنے سرکلر میں کہا ہے کہ توسیع شدہ تاریخ یعنی 7 اکتوبر تک اگر 2000 روپے کے نوٹوں کو نہیں بدلا جاتا ہے، یعنی اس کے بعد بھی اگر کسی کے پاس 2000 روپے کے نوٹ رہ جاتے ہیں تو آپ اسے بھلے ہی بینک میں جمع اور بدل نہیں سکیں گے، لیکن آر بی آئی کے 19 علاقائی دفاتر میں یہ بدلا جا سکے گا۔ حالانکہ ایک بار میں 20 ہزار روپے سے زیادہ کے نوٹ نہیں بدلے جا سکیں گے۔