خراب موسمی حالات ،امر ناتھ یاترا عارضی طور معطل جموں سے 6 ہزار6 سو یاتریوں کا14 واں جتھہ روانہ

اُڑان نیوز
سرینگر+جموں// ناسازگار موسمی صورتحال کے پیش نظر اتوار کی صبح پہلگام اور بالہ تل روٹوں سے سالانہ شری امر ناتھ یاترا کو عارضی طورپر معطل کردیا گیا ہے۔سرکاری ذرائع نے بتایا کہ خراب موسمی صورتحال کے پیش نظر اتوار کی صبح پہلگام اور بالہ تل میں یاتریوں کو روکا گیا۔انہوں نے بتایا کہ پہلگام اور بالہ تل میں شدید بارشوں کے پیش نظر یاترا کو فی الحال روک دیا گیا ہے اور جوں ہی موسم میں بہتری آئے گی تو یاتریوں کو پوترگھپا کی طرف جانے کی اجازت دی جائے گی۔بتادیں کہ یکم جولائی سے شروع ہونے والی سالانہ شری امر ناتھ جی یاترا کے دوران ابتک ڈھائی لاکھ یاتریوں نے پوتر گھپا کا درشن کیا ہے۔یاترا کے پر امن انعقاد کو یقینی بنانے کے لئے دیگر انتظامات کے علاوہ امسال سیکورٹی کا فقید المثال بندوبست کیا گیا ہے۔شری امرناتھ جی یاترا کے لئے جموں کے بھگوتی نگر بیس کیمپ سے یاتریوں کا کشمیر کی طرف روانہ ہونے کا سلسلہ جوش و خروش سے جاری ہے۔سرکاری ذرائع کے مطابق اتوار کی صبح بھگوتی نگر بیس کیمپ سے 6 ہزار 6 سو یاتریوں پر مشتمل 14 واں جھتا کشمیر کے لئے روانہ ہوا۔انہوں نے بتایا کہ یاتریوں کا یہ جھتا 241 چھوٹی بڑی گاڑیوں میں سخت سیکورٹی بندوبست کے بیچ بالہ تل اور ننون پہلگام بیس کیمپوں کے لئے روانہ ہوا۔ذرائع نے بتایا کہ ان یاتریوں میں سے بالہ تل بیس کیمپ کے لئے 2 ہزار 9 سو 98 یاتری روانہ ہوئے جبکہ ننون پہلگام بیس کیمپ کے لئے 3 ہزار 686 یاتری روانہ ہوگئے۔یکم جولائی سے شروع ہونے والی اس یاترا کے دوران اب تک زائد از2 لاکھ یاتریوں نے پوتر گھپا کا درشن کیا ہے۔62 دنوں پر محیط یہ سالانہ یاترا 31 اگست کو شرون پورنیما کے متبرک موقع پر اختتام پذیر ہوگی۔حکام نے یاتریوں کی سہولیت کے لئے دونوں راستوں پر ہیلی کاپٹر سروس بھی دستیاب رکھی ہے۔یاتریوں کے صحت کو پیش نظر رکھتے ہوئے جنک فوڈ پر پابندی عائد کی گئی ہے اور راستے میں ہی لنگروں کا بھر پور انتظام کیا گیا ہے۔جموں وکشمیر انتظامیہ اور شری امرناتھ شرائن بورڈ نے امسال بھی یاترا کے لئے فقید المثال انتطامات کئے ہیں۔دریں اثنا ملک کے مختلف حصوں سے آنے والے یاتریوں میں یاترا کے تئیں انتہائی جوش و خروش دیکھا جا رہا ہے۔یاتری حکومت اور شرائن بورڈ کی طرف سے کئے گئے انتظامات پر بھی خوش اور مطمئن ہیں۔