ہندوارہ میں بدنام زمانہ منشیات فروش کی غیر منقولہ جائیداد منسلک:پولیس

سری نگر// منشیات فروشوں کے خلاف شکنجے کو مزید کستے ہوئے جموں وکشمیر پولیس نے شمالی کشمیر کے قصبہ ہندوارہ میں ایک اور بدنام زمانہ منشیات فروش کی لاکھوں روپیوں کی غیر منقولہ جائیداد کو منسلک کر دیا۔ایک پولیس ترجمان نے اپنے ایک بیان میں تفصیلات فراہم کرتے ہوئے کہا کہ منشیات فروشوں کے خلاف کارروائیوں کو جاری رکھتے ہوئے پولیس نے ضبطی/منسلکی مہم کے دوسرے دن شمالی کشمیر کے ضلع کپوارہ کے ہندوارہ میں ایک بدنام زمانہ منشیات فروش کی جائیداد منسلک کر دی۔انہوں نے کہا: فیاض احمد ملہ ولد غلام محی الدین ملہ ساکن مقام ہمونپورہ کرال گنڈ ہندوارہ نامی بدنام زمانہ منشیات فروش کی 7 مرلوں پر مشتمل اراضی کو این ڈی پی ایس ایکٹ 1985 کے تحت منسلک کر دیا گیا’۔ان کا کہنا تھا کہ مذکورہ منشیات فروش پولیس اسٹیشن کرال گنڈ میں درج کئی مقدموں میں ملوث ہے۔پولیس بیان میں کہا گیا: ‘ہندوارہ پولیس کی طرف سے کی گئی تحقیقات کے مطابق اس جائیداد کی نشاندہی غیر قانونی طور پر حاصل کی گئی جائیداد کے طور پر ہوئی’۔بیان میں کہا گیا: ‘یہ جائیداد پہلی نظر میں مالک کی طرف سے منشیات اور سائیکو ٹراپک مواد کی غیر قانونی سمگلنگ سے حاصل کی گئی ہے’۔پولیس ترجمان نے کہا کہ مذکورہ بدنام زمانہ منشیات فروش اس وقت سینٹرل جیل کوٹ بلوال جموں میں پی آئی ٹی – این ڈی پی ایس ایکٹ کے تحت بند ہے۔بیان کے مطابق یہ آپریشن ہندوارہ پولیس کے منشیات کی بدعت کے خلاف جنگ کے لئے پر عزم ہونے کا عکاس ہے۔