فوجی سربراہ کا لداخ دورہ، حقیقی کنٹرول لائن اور سیاچن میں سیکورٹی صورتحال کا جائز ہ لیا

سری نگر//چیف آف آرمی سٹاف جنرل منوج پانڈے نے بدھ کے روز لداخ میں سیاچن گلیشئراور حقیقی کنٹرول لائن کا دورہ کر کے موجودہ زمینی صورتحال کا جائزہ لیا۔ایک فوجی عہدیدار نے بتایا کہ جنرل منوج پانڈے نے بدھ کے روز لداخ میں حقیقی کنٹرول لائن پر اگلی چوکیوں کا دورہ کیا اور موجودہ زمینی صورتحال کا جائزہ لیا۔ اس موقع پر موصوف جنرل نے فوجی اہلکاروں کی حوصلہ افزائی کرتے ہوئے انہیں اسی جوش وجذبے سے کام کرنے کی تلقین کی۔فوجی سربراہ نے دنیا کے سب سے اونچے محاذ سیاچن گلیشئر کا دورہ کیا اور وہاں پر فرائض کی انجام دہی کے دوران شہید ہوئے اہلکاروں کو شاندار الفاظ میں خراج عقیدت ادا کیا۔مرکزی وزارت دفاع کے ایک ترجمان نے بتایا کہ جنرل پانڈے نے اپنے دورے کے دوران سیاچن گلیشئر کا دورہ کیا۔انہوں نے کہا کہ اس موقع پر جنرل پانڈے نے فوجی اہلکاروں کے پیشہ ورانہ مظاہرے کے لئے ان کی حوصلہ افزائی کی اور انہیں مستقبل میں بھی اپنے فرائض پیشہ ورانہ طریقے سے انجام دینے کے لئے کہا۔انہوں نے کہاکہ فوجیوں کے ساتھ بات چیت کے دوران آرمی چیف نے کہا کہ سخت موسمی صورتحال کے باوجود بھی جوان اپنی خدمات خوش اسلوبی کے ساتھ انجام دے رہے ہیں۔اس سے قبل آرمی چیف کو فوج کے سینئر آفیسران نے حقیقی کنٹرول لائن کی صورتحال کے بارے میں بریفنگ دی۔فوجی کمانڈر کو مخالفین کے چیلنجز کا مقابلہ کرنے کے لئے کئے جانے والے اقدامات کے بارے میں بھی جانکاری فراہم کی گئی۔