تھنہ منڈی میں رہبر تعلیم اساتذہ کی پریس کانفرنس

سرکاری اسکولوں میں بہتر تعلیمی نظام کیلئے سول سوسائٹی بھی تعاون دے
نثار خان
تھنہ منڈی//جموں کشمیر رہبر تعلیم ٹیچرز فورم چیئرمین فاروق احمد تانترے نے جموں کشمیر میں نظام تعلیم کو مزید بہتر بنانے کی غرض سے ایل جی انتظامیہ اور محکمہ تعلیم کی طرف سے اُٹھائے جارہے اقدامات کی ستائش کی ہے۔ انہوں نے اقدامات کا بھر پور تعاون دینے کی یقین دہانی کراتے ہوئے سیول سوسائٹی کو بھی آگے آنے کی اپیل کی ہے ۔فاروق احمد تانترے نے رہبر تعلیم ٹیچرز کی مراعات، پرموشن اور اور لیپ رہبر تعلیم اساتذہ کے مسئلہ کو حل کئے جانے پر پرنسپل سیکریٹری آلوک کمار اور ناظم تعلیم کشمیر اور جموں کا بھی شکریہ ادا کیا ۔انہوں نے کہاکہ محکمہ تعلیم کی طرف سے منظر عام پر لائی گئی نئی ٹرانسفر پالیسی اگر چہ ایک خوش آئند قدم ہے تاہم اس میں 60 ہزار سے زائد رہبر تعلیم اسکیم کے تحت تعینات اساتذہ کو باہر رکھ کر کے یہ سکیم تب تک مکمل نہیں ہو سکتی ہے جب تک نہ اُنہیں ٹرانسفر پالیسی میں شامل کیا جاتا ہے ۔ انہوں نے اپیل کرتے ہوئے کہا ہے کہ رہبر تعلیم اساتذہ کو اس اسکیم میں لانے کی اپیل دوہرائی ہے ۔اس موقع پر فورم جنرل سیکرٹری جہانگیر عالم خان، نائب چیرمین ظہور الدین بیگ، اسداللہ وانی،صوبائی صدر کشمیر فاروق احمد،زونل صدر تھ نہ منڈی سجاد احمد اور عمران خان کے علاوہ فورم کے دیگر لیڈران موجود تھے۔