جی 20ٹورازم ورکنگ گروپ کا سہ روزہ اجلاس کامیاب رہا

The Secretary, Ministry of Tourism, Shri Arvind Singh addressing a Press Conference on outcomes of G20 Tourism Working Group Meeting, in Srinagar on May 26, 2023.

جموں و کشمیر میں سیاحت کو فروغ ملے گا
مستقبل میں سیاحوںکے ذہنوں میں موجود کسی بھی قسم کے خوف کو دور کرنے میں ملے گی مدد :مرکزی حکومت
نیوزڈیسک
نئی دہلی//مرکزی سیکرٹری برائے سیاحت نے جمعہ کے روزکہاکہ سری نگر میں منعقدہ جی20 ٹورازم ورکنگ گروپ کی تیسری میٹنگ بہت کامیاب رہی اور اس سے جموں و کشمیر میں سیاحت کو فروغ ملے گا اور مستقبل میں سیاحوںکے ذہنوں میں موجود کسی بھی قسم کے خوف کو دور کرنے میں مدد ملے گی۔نئی دہلی میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے مرکزی سیکرٹری برائے سیاحت اروند سنگھ نے یہ بھی کہا کہ 22سے24 مئی تک سری نگرمیں منعقدہ ی20 ٹورازم ورکنگ گروپ کی تیسری میٹنگ کے دورانG20 کے رکن ممالک، مدعو ممالک اور بین الاقوامی تنظیموں کے نمائندوںنے پائیدار ترقی کے حصول کیلئے سیاحت کے حوالے سےGOA کے روڈ میپ کے بارے میں معلومات اور آراء پیش کیں،اور ساتھ ہی شرکاء نے اہداف اور G20 وزرائے سیاحت کے اعلامیہ کی توثیق کی ۔مرکزی سیکرٹری برائے سیاحت نے کہاکہ جموںو کشمیر کے گرما ئی دارالحکومت سری نگر میں سیاحتی ٹریک میٹنگ کے2 اہم دستاویزات تھے۔جی20 ممبران نے وسیع پیمانے پر 5باہمی منسلک ترجیحی شعبوں پر ایک معاہدہ کیا ہے – سبز سیاحت، ڈیجیٹلائزیشن، مہارت، سیاحت، MSMEs اور منزل۔ یہ ترجیحات سیاحت کے شعبے کی منتقلی کو تیز کرنے اور 20230 کے اہداف کو حاصل کرنے کے لیے اہم تعمیراتی بلاکس ہیں۔انہوں نے کہا کہ کچھ اراکین آج تک تحریری طور پر اپنی تجاویز دیں گے اور پھر حتمی مسودہ تیار کیا جائے گا۔دستاویزات کے حتمی ورژن چوتھی TWG میٹنگ اور وزارتی میٹنگ میں رکھے جائیں گے، جو اگلے ماہ گوا میں ہونے والی ہے۔ GOA روڈ میپ اور اس کی توثیق کرنے والی وزارتی کمیونیک G20 ٹورازم ورکنگ گروپ کی آخری میٹنگ کے بعد جاری کی جائے گی جو 18سے22 جون تک ہوگی۔ مرکزی سیاحت کے سکریٹری نے کہاکہ ہم نے جی20 ٹورازم ورکنگ گروپ کی اب تک تین میٹنگیں کی ہیں۔ تیسرا ابھی سری نگر میں منعقد ہوا، اور یہ بہت کامیاب رہا۔سری نگر میں جی20 میٹنگ کے موقع پر منعقدہ میڈیا سے بات چیت میں، وزارت سیاحت کے حکام نے میٹنگ کے ایک حصے کے طور پر منعقد ہونے والے پروگراموں کی میزبانی کے بارے میں ایک پریزنٹیشن پیش کی، جس میں فلموں کی تشہیر اور نشاط گارڈن اور پاری محل جیسے خوبصورت مقامات کا دورہ شامل تھا۔ ڈل جھیل پر شکارا کی سواری اور ڈل جھیل کے کنارے رائل اسپرنگ گالف کورس بھی گئے۔یہ پوچھے جانے پر کہ کیا سری نگر میں منعقدہ G20 میٹنگ سے جموں و کشمیر میں سیاحت کو فروغ ملے گا، مرکزی سیکرٹری برائے سیاحت اروندسنگھ نے کہاکہ عام طور پر اس سے سیاحت کو فروغ ملے گا، اور اس کے نتیجے میں فلمی سیاحت کو فروغ ملے گا جس سے خطے میں سیاحت کی مجموعی ترقی میں مدد ملے گی۔انہوں نے اشتراک کیا کہ 2022 میں جموں و کشمیر نے ایک کروڑ88لاکھ سیاحوں کی ریکارڈ آمد درج کی، جن میں سے26 لاکھ نے وادی کشمیر کا دورہ کیا۔ انہوں نے مزید کہا کہ سال2023 میں یہ تعداد2کروڑ کے ہندسے کو عبور کرنے کی امید ہے۔انہوں نے کہا کہ درحقیقت، سنگاپور سے سیاحوں کا ایک گروپ حال ہی میں ایک چارٹرڈ فلائٹ میں کشمیر پہنچا تھا، جس وقت جی20 اجلاس ہوا تھا۔بعد میں پریس کانفرنس کے موقع پر بات چیت کرتے ہوئے اروند سنگھ نے کہا کہ یہ دیکھا گیا ہے کہ کوئی بھی جگہ جہاں جی20 میٹنگ کی میزبانی ہوتی ہے وہاں سیاحت میں اضافہ ہوتا ہے اور سری نگر میں جی 20 میٹنگ کی کامیاب تنظیم بھی کسی بھی قسم کے خوف کو دور کرنے میں مدد کرے گی۔ مستقبل میں سیاحوں کے ذہن میں آنے والے کسی بھی ناگوار خیالات کو دور کریں۔