رام بن میں منشیات کے مضراثرات پر سمپوزیم منعقد

رام بن/محکمہ اطلاعات اور پی آر رامبن نے سماجی بہبود کے محکمے کے ساتھ مل کر پریاس ہیم کریش ماڈل ہائی اسکول (پی ایچ ایم ایچ ایس) میترا گووند پورہ، رامبن میں منشیات کی لت سے نجات اور منشیات کے استعمال کی لعنت پر ایک سمپوزیم کا انعقاد کیا۔ضلع سماجی بہبود افسر رامبن راہول گپتا مہمان خصوصی تھے ، اس موقع پر محکمہ اطلاعات کے افسران، اساتذہ کے علاوہ طلباء کی کثیر تعداد موجود تھی۔اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے DSWO نے شرکاء پر زور دیا کہ وہ ہم نصابی سرگرمیوں میں شامل کرکے منشیات کے استعمال کے تمام طریقوں سے دور رکھنے کی کوشش کریںگے۔انہوں نے ایسے آگاہی پروگراموں کے انعقاد کی اہمیت پر غور کیا جو کہ معاشرے پر بالعموم اور خاص طور پر منشیات کے استعمال میں ملوث فرد پر منشیات کی لت کے مضر اثرات کے بارے میں آگاہی پیدا کرنے کے لیے ضروری ہے۔ڈی ایس ڈبلیو او نے بتایا کہ ضلع انتظامیہ رامبن نے بیداری کے پروگراموں کا ایک سلسلہ منعقد کیا جیسے ریلیاں، ثقافتی پروگرام، مباحثے، سمپوزیم، پینٹنگ اور مضمون نویسی کے مقابلے وغیرہ جس میں افسران، عہدیداروں، سول سوسائٹی کے ارکان، سماجی کارکنان، پی آر آئیز، کی بڑی تعداد نے شرکت کی۔ ڈپٹی کمشنر نے والدین پر زور دیا کہ وہ اپنا کردار ادا کریں اور اپنے بچوں پر نظر رکھیں اور انہیں منشیات کے استعمال سے دور رہنے کے لیے باقاعدگی سے مشورہ دیں۔نشہ مکت بھارت اور منشیات کو نہیں کہو کے تحت تمام شرکاء کی طرف سے عہد بھی لیا گیا۔پروگرام کا اختتام پرنسپل ایس کے اتری کے شکریہ کے ساتھ ہوا۔ انہوں نے محکمہ اطلاعات اور سماجی بہبود کا شکریہ ادا کیا کہ انہوں نے اسکول میں اس طرح کا بیداری پروگرام منعقد کیا۔بعد ازاں سمپوزیم میں حصہ لینے اور نمایاں کارکردگی کا مظاہرہ کرنے والے طلباء میں تعریفی اسناد بھی تقسیم کی گئیں۔