آل لداخ سٹوڈنٹس ویلفیئر ایسو سی ایشن جموں نے سالانہ دن منایا دور دراز علاقوں میں تدریسی عملے کا انتظام کیا جارہا ہے : الطاف بخاری

اڑان نیوز
جموں//وزیر تعلیم سید محمد الطاف بخاری نے تعلیمی سیکٹر میں تفاوت کو دور کرنے اور دیہی اضلاع بشمو ل لداخ خطے میں بنیادی ڈھانچے کو بڑاوا دینے کے حکومت کے عز م کو دہرایا ہے۔جموں میں آج آل لداخ سٹوڈنٹس ویلفیئر ایسو سی ایشن جموں کی سالانہ دِن تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیر موصوف نے کہا کہ حکومت نے قلیل مدتی قدم کے تحت لیہہ اور کرگل اضلاع میں عملے کی کمی کو دور کرنے کا فیصلہ کیا ہے اور ان علاقوں کے لئے منتخب اُمیدواروں کو 30فیصد زیادہ اُجرتیں دی جائیں گی۔تاہم انہوں نے کہا کہ حکومت نے اسسٹنٹ پروفیسر ، لیکچروں اور اساتذہ کی تمام خالی پڑی اسامیاں اگلے 6ماہ کے اندر پُر کرنے کا نشانہ مقرر کیا ہے ۔چیئرمین لداخ ڈیولپمنٹ کونسل کرگل حاجی کاچو علی احمد خان کے علاوہ کافی تعداد میں طلاب بھی اس موقعہ پر موجود تھے۔الطاف بخاری نے اعلان کیا کہ حکومت نے دراس کے لئے ایک ڈگری کالج کی منظوری دی ہے ۔انہوں نے کہا کہ حکومت رواں تدریسی سیشن سے ہی کلاس شروع کرنے کے لئے تیار ہے ۔انہوں نے ایل اے ایچ ڈی سی کے چیئرمین سے کہا کہ وہ کسی عمارت کی نشاندہی کریں تاکہ کلاسوں کا کام شروع کیا جاسکے۔انہوں نے کہا کہ وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی ریاست کے تمام خطوں میں تعلیم کے شعبے کو آگے بڑھانے کی وعدہ بند ہے ۔اپنے خطاب میں ایل اے ایچ ڈی سی کے چیئرمین نے لداخ کے نوجوانوں سے کہا کہ وہ مختلف شعبوں میں اپنے اہداف حاصل کرنے کے لئے تن دہی اور لگن کے ساتھ کام کریں۔ایسوسی ایشن نے کرگل کے ان لوگوں کی عز ت افزائی بھی کی جنہوں نے زندگی کے مختلف شعبوں میں کارہائے نمایاں انجام دئیے ہیں۔