سرینگر میں جنگجو مخالف آپریشن ، جگہ جگہ سیکورٹی فورسز کو تعینات کیا گیا نارہ بل پلوامہ میں دوران شب سیکورٹی فورسز اور مظاہرین کے درمیان جھڑپیں

اڑان نیوز
سرینگر//شہر سرینگر کے بژھ پورہ اور بالائی علاقہ موچھوا نوگام میں عسکریت پسندوں کی موجودگی کی اطلاع ملنے کے بعد بڑے پیمانے پر جنگجو مخالف آپریشن شروع کیا گیا جس دوران لوگوں کے شناختی کارڈ باریک بینی سے چیک کئے گئے ۔ ذرائع کے مطابق تلاشی کے دوران سیکورٹی فورسز پر پتھراو بھی کیا گیا ۔ دریں اثنا جنوبی کشمیر کے نارہ بل پلوامہ میں جنگجو مخالف آپریشن کے دوران تشدد بھڑک اٹھا ، مظاہرین کو منتشر کرنے کیلئے اشک آور گیس کے گولے داغے گئے۔ ذرائع کے مطابق مصدقہ اطلاع ملنے کے بعد سیکورٹی فورسز نے بژھ پورہ سرینگر کو محاصرے میں لے کر گھر گھر تلاشی کارروائی شروع کی جس دوران مکینوں کے شناختی کارڈ باریک بینی سے چیک کئے گئے ۔ ذرائع نے بتایا کہ سیکورٹی فورسز نے بژھ پورہ کے اندرون علاقوں کو محاصرے میں لے کر لوگوں کو گھروںمیں ہی رہنے کی تلقین کی ۔ ذرائع نے بتایا کہ عسکریت پسندوں کی موجودگی کی اطلاع ملنے کے بعد سیکورٹی فورسز نے تلاشی آپریشن شروع کیا تاہم اس دوران کسی کی گرفتاری عمل میں نہیں لائی گئی ۔ ادھر موچھوار نوگام میں اُس وقت سنسنی اور خوف ودہشت کا ماحول پھیل گیا جب فوج اور ایس او جی نے علاقے کو محاصرے میں لے کر لوگوں کے چلنے پھرنے پر پابندی عائد کی۔معلوم ہوا ہے کہ جونہی سیکورٹی فورسز کے اہلکار موچوار نوگام علاقے میں داخل ہوئے اس دوران نوجوانوں نے پتھراو بھی کیا تاہم سیکورٹی فورسز نے لاتھی چارج کیا جس کے بعد احتجاج کرنے والے منتشر ہوئے۔ ذرائع نے بتایا کہ سیکورتی فورسز نے موچھوار نوگام اور اس کے ملحقہ علاقوں کو محاصرے میں لے کر گھر گھر تلاشی کارروائی شروع کی جس دوران مکینوں سے پوچھ تاچھ کی گئی ۔ دفاعی ذرائع نے بتایا کہ مصدقہ اطلاع ملی ہے کہ موچھوار نوگام میں جنگجو چھپے بیٹھے ہیں۔ دفاعی ذرائع کے مطابق عسکریت پسندوں کے فرار ہونے کے راستوں پر پہرے بٹھا کر تلاشی شروع کی گئی ہے۔ دریں اثنا عسکریت پسندوں کی موجودگی کی اطلاع ملنے کے بعد 50آر آر 183بٹالین سی آر پی ایف اور ایس او جی پلوامہ نے نارہ بل نیوا گاؤں کو محاصرے میں لے کر جونہی جنگجو مخالف آپریشن شروع کیا اس دوران لوگ مشتعل ہوئے اور سڑکوں پر آکر احتجاجی مظاہرئے کئے ۔ ذرائع نے بتایا کہ شام دیر گئے جونہی سیکورٹی فورسز نے نارہ بل نیوا پلوامہ گاؤں کو محاصرے میں لے لیا اس دوران نوجوانوں نے سیکورٹی فورسز پر پتھراو کیا جنہیں منتشر کرنے کیلئے اشک آور گیس کے گولے داغے گئے۔ ذرائع کے مطابق مشتعل نوجوانوں اور فورسز کے درمیان کافی دیر تک تصادم آرائیوں کا سلسلہ جاری رہا ۔ دریں اثناشام دیر گئے سیکورٹی فورسز نے ہف کھوری شوپیاں گاؤں کو بھی محاصرے میں لے کر گھر گھر تلاشی کارروائی شروع کی ۔ ذرائع کے مطابق 44آر آر ، 79،14اور 185بٹالین سی آر پی ایف نے عسکریت پسندوں کی موجودگی کی اطلاع ملنے کے بعد شوپیاں کے ہف کھوری گاؤں کو محاصرے میں لیا جس دوران گھر گھر تلاشی لی گئی ۔ دفاعی ذرائع کے مطابق نارہ بل نیوا پلوامہ اور ہف کھوری شوپیاں میں جنگجو مخالف آپریشن جاری ہے اور آس پاس علاقوں میں جنریٹر بھی نصب کئے گئے ہیں۔