’بورڈ کی مہربانی سے میں سال میںدو مرتبہ جنم دن مناتاہوں‘

’بورڈ کی مہربانی سے میں سال میںدو مرتبہ جنم دن مناتاہوں‘
الطاف حسین جنجوعہ
جموں//وزیر تعلیم سعید الطاف بخاری نےJKBOSEکی طرف سے طلبہ کے نام، ولدیت اور تاریخ پیدائش میں کی جانے والی غلطیوں کو گہری تشویش ظاہر کرتے ہوئے انکشاف کیاکہ بورڈ کی مہربانی سے وہ ہرسال دو جنم دن مناتے ہیں۔انہوں نے کہا”اصل میں میری تاریخ پیدائش 21فروری ہے، لیکن جس اسکول میں ، میں پڑھتاتھا، وہاں ہم 7طلبہ تھے، جن سبھی کی تاریخ پیدائش اتفاقیہ طور پر19فروری تھی، بورڈ حکام نے میری تاریخ پیدائش بھی21فروری کی بجائے 19فروری کردی، درستگی کا عمل اتنا طوالت بھرا ہے کہ آج تک میں نے سال میں دو مرتبہ اپنا جنم دن منانا ہی بہتر سمجھا۔ سرکاری کاغذات کے مطابق19فروری کو جنم دن مناتاہوں، جبکہ اصلی جس دن جنم ہواتھا، وہ21فروری کو مناتاہوں“۔وزیر تعلیم نے JKBOSEکی طرف سے منعقدہ ایک تقریب کے دوران یہ انکشاف کیا اور بورڈ چیئرمین پرزور دیاکہ نام، ولدیت، پتہ اور تاریخ ِ پیدائش میں کی جانے والی غلطیوں کی تصحیح کے لئے سنگل ونڈو آن لائن نظام قائم کیاجائے تاکہ بچوں کو سال بھر ، یہاں آکر دفتروں کے چکر نہ کاٹنے پڑیں۔وزیر مملکت برائے تعلیم پریہ سیٹھی نے بھی اس بات پرزور دیتے ہوئے کہاکہ ان کے پاس متعدد شکایات آئی ہیں کہ بچوں کو نام، ولدیت، عمر اور تاریخ پیدائش میں کی جانے والی غلطیوں کو درست کرانے کے لئے کئی کئی ماہ ٹھوکریں کھانی پڑتی ہیں، لہٰذا ترجیحی بنیادوں پر سنگل ونڈو سسٹم کر کے درستگی کے عمل کو آن لائن کیاجائے۔