آصفہ قتل، جانی پور اور ستواری واقعات بدنماداغ:دویندر رانا یہ ڈوگروں کا جموں نہیں ،بھاجپا نے سیکولر کردار کو نقصان پہنچایا

الطاف حسین جنجوعہ
جموں//نیشنل کانفرنس کے صوبائی صدر اور رکن اسمبلی نگروٹہ دویندر سنگھ رانا نے بھارتیہ جنتا پارٹی پر جموں کے ’سیکولر کردار ‘کو نقصان پہنچانے کا الزام عائد کیا ہے۔ انہوں نے کہاکہ بھاجپا نے جموں کے حالات کو خراب کیا ہے۔ جموں صوبہ کے لوگوں نے مشکل ترین حالات کے باوجود مذہبی رواداری، فرقہ وارانہ ہم آہنگی اور آپسی بھائی چارہ کو قائم ودائم رکھا لیکن پچھلے چار سالوں سے بھاجپا نے اقتدار میں آکر ان روایات کو تباہ وبرباد کر دیا ہے۔قانون سازاسمبلی میں وقفہ سوالات کے دوران دویندر سنگھ رانا نے پچھلے کچھ عرصہ سے جموں میں پیش آرہی فرقہ وارانہ وارداتوں کا ذکر کرتے ہوئے کہا ”آصفہ قتل معاملہ ، جانی پور اور ستواری واقعات پیش آئے ہیں۔ یہ اچھی روایت نہیں ہے۔ جموں صدیوں سے آپسی بھائی چارہ اور سیکولر کردار کے لئے جانا جاتاہے جس کو نقصان پہنچایاجارہاہے۔آصفہ معاملہ میں ابھی تک رپورٹ نہیں آئی، آج ہر کوئی اس پر سوال اٹھارہاہے۔ دویندر سنگھ رانا نے اسپیکر کے سامنے چاہِ ایوان(ویل)میں آکر احتجاج کرتے ہوئے کہاکہ آج آپ(بھارتیہ جنتا پارٹی)جو غلط روایت جموں کے اندر قائم کر رہی ہے یہ ہمارے لئے ٹھیک نہیں، میں ایک ہندو ہونے کے ناطے کہہ رہا ہوں کہ آپ نے ڈوگروں کے سرشرم سے جھکادیئے ہیں، آج جموں کے اندر جوحالات ہیں، یہ ڈوگروں کا جموں نہیں رہا۔آپ نے ڈوگروں کی آن، بان، شان اور پہچان پر داغ لگائے ہیں جس کے لئے آپ کو عام لو گ کبھی معاف نہیں کریں گے۔ انہوں نے کہاکہ”میں اس ایوان کے اندر رہوں یا نہ رہوں، لیکن جموں کے سیکولر کردار کو ختم کرنے کی آپ (بی جے پی)کی جوکوشش ہے، اس کو کبھی کامیاب نہیں ہونے دیاجائے گا۔