نائب وزیر اعلیٰ نے وویکا آنند جینتی کے موقعہ پر بسوہلی ترانے کا آغاز کیا شام لال اور پریا سیٹھی نے بسوہلی کی ثقافت کو تحفظ دینے کیلئے حکومت کی کوششوں کی ستائش کی

اڑان نیوز
کٹھوعہ // نائب وزیر اعلیٰ ڈاکٹر نرمل سنگھ نے آج بسوہلی میں سوامی وویکا آنند جینتی تقریبات کے دوران خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ثقافت کسی بھی قوم کی تعمیر میں ایک اہم رول ادا کرتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہمار امُلک گوناں گوں ثقافتی اقدار کا عکاس ہے۔اس موقعہ پر صحت عامہ کے وزیر شام لال چودھری اور سیاحت کی وزیر مملکت پریا سیٹھی بھی موجود تھیں۔اس تقریب میں پٹھانکوٹ، جموں، کٹھوعہ، سانبہ اور اودہم پور سے تعلق رکھنے والے لگ بھگ200 طُلاب نے شرکت کی۔سب سے پہلے نائب وزیر اعلیٰ نے بسوہلی ترانے اور بسوہلی ثقافتی ورثے سے متعلق ایک ٹیلی فلم کا بھی آغاز کیا۔ اس موقعہ پر خطاب کرتے ہوئے نائب وزیر اعلیٰ نے کہا کہ اس پروگرام کی بدولت بسوہلی کے کلچر کو فروغ دینے میں مدد ملے گی۔انہوں نے وشواس تھلی کی طرف سے بسوہلی آرٹ کو فروغ دینے کی کوششوں کی تعریف کی۔ انہوں نے کہا کہ کشمیر اور بسوہلی میں ہی پشمینہ شام لوموں پر تیار کئے جاتے ہیں۔نائب وزیر اعلیٰ نے کہا کہ علاقے میں سیاحتی سرگرمیوں کو فروغ دینے کے لئے لکھن پور۔ دُونیرا سڑک کو قومی شاہراہ میں تبدیل کرانے کے لئے ایک ڈی پی آر جلد ہی تیار کیا جائے گا۔ڈاکٹر سنگھ نے کہا کہ سوامی وویکا آنند کی تعلیمات نے مُلک کے سماجی و اقتصادی منظر نامے پر انمٹ نقوش چھوڑے ہیں۔اس موقعہ پر خطاب کرتے ہوئے شام لال چودھری نے نوجوانوں پر زور دیا کہ وہ سوامی وویکاآنند کی تعلیمات پر عمل پیرا رہیں۔تقریب سے خطاب کرتے ہوئے سیاحت کی وزیر مملکت پریا سیٹھی نے وشواستھالی کے بانی کو اس طرح کا پروگرام منعقد کرانے کے لئے مبارک باد دی۔سماجی اصلاحکار، فلسفی اور دانشور سوامی وویکا آنند کا155 واں جن دن منانے کے سلسلے میں منعقد کیا گیا تھا۔موصوفہ نے بسوہلی کے ثقافتی ورثے کو فروغ دینے کے لئے مزید اقدامات اُٹھانے کی ضرورت پر زور دیا۔ایس ایس پی کٹھوعہ سلیمان چودھری کے علاوہ کئی دیگر اہم شخصیات بھی اس موقعہ پر موجود تھیں۔