مزید بجلی تیار کرنے کے امکانات کا جائزہ لیاجائے: نرمل سنگھ

جموں//نائب وزیرا علیٰ ڈاکٹرنرمل سنگھ نے متعلقہ افسروں کو ہدایت دی ہے کہ وہ ریاست کی مناسب جغرافیائی صورتحال کو رکھتے ہوئے مزید بجلی تیار کرنے کے امکانات کا جائزہ لینے کی ہدایت دی ہے تاکہ ریاست بجلی پیداوار میں خود کفیل بن سکے اور لوگون کو بجلی کی بہتر سہولیات مہیا ہوسکے ۔انہوں نے پن بجلی سیکٹر میں اختراعی اقدامات کی عمل آوری میں تیزی لانے کی ضرورت پر بھی زور دیا۔ نائب وزیر اعلیٰ جموں وکشمیر سٹیٹ پاور ڈیولپمنٹ کارپوریشن لمٹیڈ کی پانچویں مینجمنٹ اینڈ فائنانس سب کمیٹی میٹنگ سے خطاب کر رہے تھے۔ میٹنگ میں بجلی کے وزیرمملکت سید فاروق اندرابی نے شرکت کی۔اس موقعہ پر کمشنر سیکرٹری پی ڈی ڈی ہردیش کمار ، سیکرٹری پلاننگ سلیم شیشگر اور ایم ڈی جے کے پی ڈی سی کے علاوہ کئی دیگر افسران بھی موجود تھے۔نائب وزیراعلیٰ نے افسروں سے کہا کہ وہ لوگوں کی بجلی ضروریات کو پورا کرنے کے لئے ایک جامع فریم ورک تیار کریں ۔ انہوں نے کہا کہ قدرت جموں وکشمیر کو کافی آبی ذخائر سے مالا مال کیا ہے اور ان ذخائر کو پیشہ وارانہ طریقے پر بروئے کار لانے سے ریاست کو بجلی کی پیداوار میں ایک اعلیٰ مقام دلایا جا سکتا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ بجلی کی صورتحال میں بہتر ی لانے کے لئے ایک کثیر رخی لائحہ عمل اختیار کرنے کی ضرورت ہے ۔انہوںنے کہاکہ بجلی کی زیادہ سے زیادہ پیداوار یقینی بنانے کے ساتھ ساتھ بجلی کی تقسیم کاری اور ترسیل کے دوران نقصانات کو کم کرنے کے لئے بھی اقدامات کئے جانے چاہئیں۔نائب وزیر اعلیٰ نے کہا کہ مختلف پروگراموں اور پروجیکٹوں کی بروقت تکمیل کو بھی یقینی بنایا جانا چاہئے ۔انہو ں نے کہاکہ بجلی سیکٹر کو دوام بخشنے کے لئے پی ایم ڈی پی کے تحت خصوصی مد رکھے گئے ہیں۔نائب وزیراعلیٰ نے کہا کہ پن بجلی وسائل کے ساتھ ساتھ شمسی توانائی سیکٹر کو بھی استعمال میںلایا جانا چاہیئے۔انہوںنے کہاکہ بجلی کی پیداوار اور آمدنی کے اہداف کو حاصل کرنے کے لئے متعلقین کو مزید تند ہی اور لگن کے ساتھ کام کرنا چاہیئے۔